1

سربراہ عوامی تحریک ڈاکٹر طاہرالقادری نے ہیوسٹن میں نماز عید ادا کی، پانچ اسلامک سنٹرز کے افتتاح کیے

ارتکاز دولت کا خاتمہ اسلامی فلسفہ معیشت کی بنیاد ہے:ڈاکٹر طاہرالقادری
متعدل معاشرہ کے قیام کیلئے اسلام نے انفرادی ،اجتماعی سطح پر گائیڈز لائن دی ہیں:خطاب

 

 

پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ ڈاکٹر محمد طاہرالقادری نے امریکہ (ہیوسٹن) جامع مسجد غوث الاعظم میں نماز عید ادا کی، سربراہ عوامی تحریک امریکہ کے تنظیمی، تربیتی خطابات کے سلسلے میں امریکہ میں ہیں، انہوں نے اس دورہ کے دوران ہیوسٹن میں منہاج القرآن کے زیر اہتمام قائم پانچ اسلامک سنٹرز کے افتتاح بھی کیے،نماز عید میں شریک اوورسیز رہنماؤں اور کارکنان سے گفتگو کرتے ہوئے سربراہ عوامی تحریک نے کہا کہ ارتکاز دولت کا خاتمہ اور وسائل کی منصفانہ تقسیم اسلامی فلسفہ معیشت کی بنیاد ہے، قربانی افضل ترین عبادت ہونے کے ساتھ ساتھ دولت کی تقسیم، روزگار کی فراہمی، غربت میں کمی اور ریاستی سطح پر ریونیو کے حصول کا ایک بڑا ذریعہ بھی ہے، تحریک منہاج القرآن کی سپریم کونسل کے چیئرمین ڈاکٹر حسن محی الدین القادری نے بھی سربراہ عوامی تحریک کے ہمراہ نماز عید ادا کی،نماز عید کی امامت سربراہ عوامی تحریک کے پوتے اور ڈاکٹر حسن محی الدین القادری کے بڑے صاحبزادے شیخ حماد مصطفی نے کی، ڈاکٹر محمد طاہرالقادری نے پاکستانی کمیونٹی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اسلامی معیشت اور معاشرت میں متعدل معاشرہ کے قیام کیلئے انفرادی اور اجتماعی سطح پر گائیڈلائنز دی گئی ہیں ،انہوں نے کہا کہ اللہ کا فرمان ہے رشتہ داروں کو ان کا حق ادا کرو اور محتاجوں اور مسافروں کو بھی دو اور اپنا مال فضول خرچی میں مت اڑاؤ، ڈاکٹر طاہرالقادری نے کہا کہ صاحب حیثیت لوگوں کی اسلامی و ملی ذمہ داری ہے کہ وہ مستحقین اور غریب رشتہ داروں کا ہر حوالے سے خیال رکھیں، انہوں نے کہا کہ کسی کو صاحب حیثیت ہونے سے ہر گز یہ صوابدیدی اختیار نہیں مل جاتا کہ وہ اللہ کے دئیے ہوئے رزق کی فراوانی کو نمود و نمائش کیلئے استعمال کرے یا فضول خرچی سے کام لے،اسلام ہراعتبار سے اعتدال، توازن اور رواداری کا دین اور ضابطہ حیات ہے۔